HMBIq

نریندر مودی کا خطاب اقوام متحدہ اورعالمی برادری کیلئے لمحہ فکریہ ہے‘ عبدالستار حامد

مرکزی جمعیت اہل حدیث پنجاب کے امیر پروفیسر عبدالستار حامد، میاں محمود عباس ناظم اعلیٰ پنجاب نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ میں جنرل اسمبلی سے وزیراعظم کا دلیرانہ خطاب قومی امنگوں کا ترجمان ہے اب صرف اس پر جرات مندانہ عمل کی ضرورت ہے۔ مسئلہ کشمیر کے حل تک بھارت کے ساتھ تعلقات ، تجارت اور اسے پسندیدہ ملک قرار دینے کے معاملات ختم کیے جائیں۔ بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے اپنے خطاب میں اقوام متحدہ پر عدم اعتماد کا اظہار کیا ہے جو عالمی برادری کے لیے لمحہ فکریہ ہے۔ انہوں نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دینی عصری تعلیم اور معاشرے کی اصلاح میں دینی مدارس کا کردار تاریخی اور ناقابل فراموش ہے۔ طلبہ اپنے کردار عمل کو اسلام کی روشن تعلیمات کے سانچے میں ڈھالیں کیونکہ اسلام کا چراغ دینی مدارس کے سبب روشن ہے۔ طاہر القادری کا دینی مدارس کو ختم اور سیکولر سکولز کا فروغ مغربی ایجنڈا ہے، ان کی یہ خواہش کبھی بھی پوری نہ ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ لندن پلان کا پارٹ ون ناکام دوسرے پارٹ کی ریہرسل کی جاری ہے۔ لندن سازش سے ملکی معیشت کو اربوں روپے کا نقصان پہنچا، قوم عمران خان و طاہر القادری کو معاف نہیں کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ دینی مدارس اسلام کے قلعے اور طلبہ اس کی فوج ہیںَ دینی مدارس کو جدید تقاضوں کے ہم آہنگ کرنا خوش آئند اور عصری تعلیم سے دینی مدارس کے طلبہ کو روشناس کروانے سے انتہا پسندی کے لگے لیبل کا خاتمہ ہو گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے دینی مدارس کے طلبہ کے اعزاز میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

You may use these HTML tags and attributes: <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <strike> <strong>